Global Editions

اپنی گاڑی کی کارکردگی سے آگاہ رہیے۔۔۔ ایکس گئیر کی مدد سے

تصور کیجئے آپ ملک کے کسی ایسے حصے میں سفر کر رہے ہیں جو کسی حد تک دورافتادہ ہے اوروہاںٹریفک کابہائو کم ہے۔ یہ ایک خوبصورت دن اور سورج کی روشنی پھیلی ہوئی ہے پھر اچانک ایسا ہوتا ہے کہ آپ کی گاڑی چند جھٹکے کھا کر بند ہو جاتی ہے اور آپ اب ایسے مقام پر موجود ہیں جہاں سے آگے بڑھنے کا کوئی راستہ سجھائی نہیں دے رہا اور نہ ہی یہ سمجھ آ رہا ہے کہ گاڑی کو اچانک کیا ہوا اور یہ کیسے ٹھیک ہو گی۔ دوران سفر ایسی صورتحال کا سامنا کسی کو بھی کرنا پڑ سکتا ہے اور یہ کوئی انہونی بات نہیں تاہم اب ایسی صورتحال سے قبل ازوقت بچا جا سکتا ہے اور اس کے لئے گاڑی میں آپ کو صرف ایک ڈیوائس نصب کرنی ہے اور اس کا نام ہے ایکس گئیر (XGear) یہ ڈیوائس ایک پاکستانی کمپنی XGear نے تیار کی ہے اور یہ گاڑی کے ڈرائیور کو گاڑی کے بارے میں بنیادی معلومات فراہم کرتی ہے۔یہ ڈیوائس گاڑی کے اندر On-Board Diagnostics پورٹ میں نصب کی جاتی ہے۔ یہ ڈیوائس گاڑی کا ہر لحاظ سے جائزہ لیتی رہتی ہے چاہے وہ فیول کی صورتحال ہو، فیول کی کھپت ہو یا گاڑی کی سروس کی ضروریات ہوں یا ڈرائیور کے گاڑی چلانے کا طریقہ ہو۔ اس کے ساتھ ساتھ یہ ڈیوائس گاڑی کے سفر کا ریکارڈ بھی محفوظ رکھتی ہے اور ڈرائیور کو ان تمام معلومات سے آگاہ رکھتی ہےجوکہ وہ فوری اور بروقت اقدامات اٹھا سکے اور دوران سفر پریشانی سے محفوظ رہ سکے۔ یہ ڈیوائس ہر وقت انٹرنیٹ سے منسلک رہتی ہے چاہے گاڑی پارکنگ میں ہی کیوں نہ کھڑی ہو۔

ایکس گئیر کی ویب سائٹ کے مطابق ایکس گئیر کلائوڈ گاڑی کے حوالےسے لاکھوں پوائنٹ جمع کرتا ہے اور اس کے تجزیئے کے بعد الرٹ اور رپورٹس جاری کرتا ہے تاکہ صارفین کو اپنی گاڑی پر نہ صرف مکمل کنٹرول حاصل ہو بلکہ انہیں اپنی گاڑی کو بہترین حالت میں رکھنے کا موقع بھی مل سکے۔ یہ ڈیوائس گاڑی کے ڈرائیور کی ڈرائیونگ عادات اور گاڑی کی رفتار کے بارے میں بھی مکمل ڈیٹا محفوظ رکھتی ہے اور اس کی بنیاد پر یہ آگاہی دیتی ہے کہ ڈرائیور کو کس طرح اپنی ڈرائیونگ میں بہتری لانی چاہیے۔ اس کے ساتھ ساتھ یہ ڈیوائس جی پی ایس کی مدد سے گاڑی کی لوکیشن کے ساتھ ساتھ روٹ کے بارے میں بھی معلومات فراہم کرتی ہے۔

کمپنی کے شریک بانی خرم شاہد بٹ اور محمد احمد خالد نے ایکس گئیر کے بنیادی تصور کو تخلیق کیا اور کومسیٹ یونیورسٹی میں یہ ان کا فائنل پراجیکٹ بھی تھا دونوںنے کامسیٹ سے سال 2006 میں انڈرگرایجویٹ کی ڈگری حاصل کی تھی اور بعد میں دونوں نے اس ڈیوائس کو اپنی گاڑی پر آزمانے کے بعد اس پراجیکٹ کو آگے بڑھانے کا فیصلہ کیا۔ ایکس گئیر کے بنیادی تصور کو بھی پلان نائن میں تقویت دی گئی اور اس حوالے سے ایکس گئیر کے بانیوں کو بنیادی تربیت بھی دی گئی۔ اس وقت ایکس گئیر کئی ملٹی نیشنل کمپنیوں جن میں نیسلے اور پیپسی شامل ہے کے ساتھ کام کر رہی ہے اس کے علاوہ اس کمپنی نے بین الاقوامی سطح پر بھی اپنی خدمات کی فراہمی کا سلسلہ شروع کر رکھا ہے اور اس وقت یہ کمپنی آسٹریلیا، جرمنی، ہالینڈ، پولینڈ اور فرانس شامل میں کامیابی کے ساتھ خدمات فراہم کر رہی ہے۔

تحریر: نشمیا سکھیرا (Nushmiya Sukhera)

Read in English

Authors

*

Top