Global Editions

انشورنس کمپنیوں کی مدد سے سستے سمارٹ گھر بنائیں

امریکہ میں انشورنس کمپنیوں یو ایس اے اے (USAA) اور امریکن فیملی نے حال ہی میں اعلیٰ ٹیکنالوجی پر انشورنش میں رعایت دینے کی پیش کش کی ہے۔ بس اپنے گھر میں انٹرنیٹ سے منسلک آلات مثلاً نیا تھرموسٹیٹ لگائیں اور بدلے میں ہوم انشورنس پالیسی میں رعایت لیں۔ اس قسم کی پیش کش سے سمارٹ گیجٹس اختیار کرنے اور انشورنس بزنس بڑھانے میں مدد ملے گی اور اس سے آپ کو اپنے گھر میں تبدیلی لانے کا بھی موقع ملے گا۔ مستقبل میں آپ کا انشورنس ایجنٹ یہ بھی کرسکتا ہے کہ گھر کا پائپ پھٹنے سے پہلے پلمبر کو بلا لے۔ تاہم چوریوں اور لیکج سے بچنے کیلئے استعمال ہونے والے ڈیٹا سےتاوان کی طلبی جیسے خطرات بھی پیدا ہو سکتے ہیں۔ اسی طرح سٹیٹ فارم انشورنس کمپنی صارف کو گھریلو حفاظتی نظام نصب کرنے کی پیش کش کرتی ہے۔ لبرٹی میوچل انشورنس کمپنی دھویں سے بچائو کا نظام مفت میں فراہم کرتی ہے۔ کچھ انشورنس ایجنٹ اس سے بھی آگے جانا چاہتے ہیں۔ ان کے خیال میں انٹرنیٹ سے منسلک آلات کو گھر میں نصب کرنے سے نئے ڈیٹا کا سیلاب آئے گا جس سے انہیں نہ صرف انشورنس کلیم کے امور سرانجام دینے میں آسانی ہو گی بلکہ صارف سے تعلقات بھی بہتر ہوں گے۔ ذرا تصور کریں کے آپ کے گھر سے ملنے والے ڈیٹا کا تجزیہ کرکے مرمت وغیرہ کی ترجیحات طے کرسکتا ہے۔یو ایس اے اے (USAA) انشورنس کمپنی میں انوویشن کے نائب صدر جان مائیکل کوول کا کہنا ہے کہ وہ گھر کیلئے چیک انجن کی طرح کا آلہ نصب کرنے کاسوچ رہے ہیں تاکہ اگر گھر کا پائپ پھٹنے والا ہو تو انشورنس ایجنٹ آپ کو پہلے سے خبردار کردے۔ لیکن جس طرح انشورنس کمپنیاں سوچ رہی ہیں اس پر عمل کرتے ہوئے گھروں کو نجی زندگی اور تحفظ نے سوال اٹھا دیئے ہیں۔ مثلاً وہ ڈیٹا جو کمپنیاں اپنے صارف کے پانی کے نظام کی حفاظت کیلئے استعمال کریں گی ، لیکج کی صورت میں وہ ڈیٹا صارف کے شدید ردعمل کا باعث بھی بن سکتا ہے اور وہ انشورنس کے پریمیم کا مطالبہ بھی کرسکتا ہے۔ امریکن فیملی اور یو ایس ایس اے کمپنیاں کہتی ہیں کہ وہ اپنے صارفین کو واضح طور پر بتا دیتی ہیں کہ ان کے ڈیٹا کے ساتھ کیا کیا جائے گا۔

تحریر: سٹیسی ہگن بوتھم (Stacey Higginbotham)

Read in English

Authors
Top