Global Editions

اب آپ کے گھر کے سارے کام آپ کی مرضی کے مطابق

آشوتوش سکسینا (Ashutosh Saxena) برین آف تھنگز (Brain of Things) نامی کمپنی کے سی ای اور اور شریک بانی ہیں۔ ان کی کمپنی نے کیسپر (Caspar) نامی مصنوعی ذہانت کا سسٹم تیار کیا ہے جو آپ کے گھر کو ایک روبوٹ میں تبدیل کردیتا ہے جس سے آپ بات کرسکتے ہيں۔ اس سال کے درمیانی حصے تک کیسپر کیلیفورنیا اور ٹوکیو میں 500 گھروں میں استعمال ہونے لگے گا۔

ان میں سے ہر ایک گھر میں سو کے قریب آلات نصب ہيں جن میں حرکت اور ہوا میں نمی کے تناسب کے سینسرز، مائیکروفونز، کیمرے، تھرموسٹیٹس اور آٹومیٹڈ اپلائنسز شامل ہیں۔ یہ تمام آلات کیسپر کو گھر میں رہنے والے افراد کے متعلق معلومات فراہم کرتے رہتے ہيں، جس کے بعد وہ مختف الگارتھمز کا استعمال کرکے خود کو لوگوں کی عادات اور ترجیحات کے متعلق ڈھالتا ہے۔

مثال کے طور پر، اگر آپ آن لائن ڈیلوری کے متعلق سوالات پوچھتے رہتے ہيں، تو کیسپر آپ کو آپ کے پیکیجز موصول ہوتے ہی الرٹس بھیجنا شروع کردے گا۔ اسی طرح، وہ آپ کی سرگرمیوں کے مطابق آپ کی موسیقی کی پلے لسٹ میں بھی ردوبدل کرنا سیکھ جائے گا۔

کسی کمپیوٹر کو اپنے متعلق اتنی تفصیل فراہم کرنا کس حد تک محفوظ ہے؟ جب سکسینا سے یہ سوال پوچھا گیا، انہوں نے بتایا کہ اس حساس خام ڈیٹا کو کلاؤڈ پر اپ لوڈ کرنے کے بجائے، اسے گھر میں ہی ذخیرہ کیا جاتا ہے۔

سکسینا کو کیسپر بنانے کا خیال 2015ء میں سمارٹ سپیکرز کی کارکردگی دیکھنے کے بعد آیا۔ ایمزان ایکو جیسے آلات موسیقی چلانے، آن لائن چیزیں آرڈر کرنے، گھر کی بتیاں جلانے اور بند کرنے کے علاوہ بہت سارے کم کرلیتے تھے۔ لیکن ان سے اپنی مرضی کے مطابق کام کروانا بہت مشکل ثابت ہورہا تھا۔ بعض دفعہ غلط بتی بند کردی جاتی تھی، اور جب روٹین میں کسی قسم کی تبدیلی آتی تو وہ خود کو ایڈجسٹ نہيں کرپاتے تھے۔

یہ سب دیکھ کر سکسینا نے، جو ایک روبوٹکس کے ریسرچر ہيں، ایک بہتر سسٹم بنانے کا فیصلہ کیا۔

وہ کہتے ہيں "اب آپ کو گھر پر ڈیلوری نہ پہنچنے کی فکر کرنے کی ضرورت نہيں ہے۔ اگر ایسا ہوجائے تو کیسپر آپ کو فوری طور پر مطلع کردے گا۔ اس کے علاوہ، وہ برتن دھونے کا صابن بھی آرڈر کردے گا، اور آپ کی مرضی کے مطابق، آپ کے گھر کے ماحول کو کنٹرول بھی کرے گا۔"

تحریر: یٹنگ سن (Yiting Sun)

Read in English

Authors
Top