Global Editions

اُوبر کی ڈرونزکے ذریعے اشتہاری مہم

by Michael Reilly

نجی کمپنیاں اپنی مشہوری کیلئے اشتہارات کے مختلف ذرائع استعمال کرتی ہیں تاکہ زیادہ سے زیادہ صارفین کی توجہ حاصل کی جاسکے۔ ان میں زیادہ مقبول عام اخبارات، ٹی وی اور سوشل میڈیا ہے۔ اوبر نے اپنی مشہوری کیلئے ان تینوں ذرائع ابلاغ کے ساتھ ایک نیا ذریعہ اختیار کیا ہے۔ اوبر نے اپنی اشتہار بازی کیلئے اب ڈرونز کا بھی استعمال شروع کردیا ہے۔ مختلف ملکوں کے بڑے شہروں میں اکثر ٹریفک جام ہو جاتی ہے یا پھر ٹریفک سگنلز پر گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ جاتی ہیں۔ ڈرائیورز کیلئے یہ مرحلہ بڑا صبرآزما اور تھکا دینے والاہوتا ہے۔ اس موقع پر اگر آپ کو ڈرون آہستہ آہستہ سے اڑتا ہوا نظر آئے اور اس پر کمپنی کا اشتہارلٹکا ہوا ہو تو ڈرائیورز اور دیگر مسافروں کیلئے خاصی دلچسپی کا باعث اور خوشگوار حیرت کا سبب ہو گا۔ لاطینی امریکہ کے شہر وں میں عموماً ٹریفک کے اژدھام ، ٹریفک جام اور سگنلز پر گاڑیوں کی طویل قطاریں نظر آتی ہیں۔ اوبر کیلئے لاطینی امریکہ کے شہر اپنے کاروبار کی توسیع کیلئے بڑے پرکشش ہیں۔ لاطینی امریکہ کا شہر میکسیکو سٹی میں بھی اس وقت ڈرائیور حیران رہ گئے جب وہ ٹریفک میں پھنسے ہوئے تھے ۔ اس وقت اوبر کا ڈرون اشتہار لئے آہستہ روی سے اڑ رہا تھا۔ ڈرون کہیں پر وقفے وقفے سے رک جاتا اور پھر اڑنا شروع کردیتا تھا۔ اس طرح ڈرائیورز اور سواریوں کو اشتہار پڑھنے کا خاصا وقت مل جاتا تھا۔ اشتہار بڑا واضح اور مختصر پیغام لئے ہوئے تھا تاکہ ڈرائیورز اور سواریوں کو اسے پڑھنے اور سمجھنے میں دقت نہ ہو اور پیغام بھی آسانی سے منتقل ہو جائے۔ اشتہار میں سوال کیا گیا تھا کہ “آپ خود ڈرائیونگ کررہے ہیں؟یہی وجہ ہے کہ آپ آتش فشانی کو نہیں دیکھ پاتے” یہ پیغام انگریزی کے ساتھ ہسپانوی زبان میں بھی دیا گیا تھا۔ اس مختصر اشتہار کا مطلب یہ تھا کہ اگر آپ اوبر کے ذریعے سفر کریں گے تو ڈرائیونگ کے تھکا دینے والے عمل سے بچ جائیں گے۔ ٹریفک کا اژدھام کم ہو جائے گا، ٹریفک جام میں کمی آئے گی اور تھوڑے وقت میں منزل پر پہنچ جائیں گے۔ آتش فشانی کی اصطلاح بڑے شہروں میں سموگ کیلئے استعمال کی گئی تھی جو میکسیکو سٹی کے قریب دو پہاڑ کی چوٹیوں سے لاوا اگلنے کے بعد پھیلتی ہے۔ واضح رہے کہ یہ اشتہار ماحولیاتی آلودگی کی حمایت میں نہیں دیا جارہا بلکہ یہ اوبر کی رائڈ شیئر سروس کا ہے جس میں چار سواریاں الگ الگ گاڑیوں کی بجائے ایک ہی گاڑی میںمختصر وقت اور معمولی کرائے پر اپنی اپنی منزل تک پہنچ سکتے ہیں۔

تحریر: مشعل رئیلائے (Michael Reily)

Read in English

Authors

*

Top