Global Editions

عالمی ادارہ صحت ٹک ٹاک پر کرونا وائرس کے متعلق معلومات فراہم کررہا ہے

عالمی ادارہ صحت نے کرونا وائرس کے متعلق غلط معلومات کا مقابلہ کرنے کے لیے ٹک ٹاک پر اکاؤنٹ بنالیا ہے۔

انہوں نے جمعہ کو اپنی پہلی ویڈيو جاری کی، جس میں کرونا وائرس کے متعلق بنیادی معلومات فراہم کی گئیں تھی۔ اگلے روز ان کی دوسری ویڈيو میں ماسک پہننے کے بارے میں بتایا گیا۔ دو دن کے اندر، عالمی ادارہ صحت کا اکاؤنٹ 162،000 فولورز اور 12 لاکھ لائکس حاصل کرنے میں کامیاب ہوگیا۔

عالمی ادارہ صحت ٹک ناک کے مقصد کو سمجھ نہيں پایا ہے۔ ٹک ٹاک بنیادی طور پر شرارتوں، طنزومزاح یا ناچ گانے پر مشتمل مختصر ویڈيوز کے لیے بنایا گیا ہے۔ اس کے برعکس عالمی ادارہ صحت کی ویڈیوز کافی سنجیدہ نوعیت کی ہيں۔ پہلی ویڈيو میں معلومات عامہ فراہم کرنے والے اشتہار کی طرح انفیکشن کی روک تھام اور کنٹرول کے تکنیکی لیڈ بینیڈیٹا ایلیگرانزی (Benedetta Allegranzi) کو بڑی سنجیدگی سے کرونا وائرس کے متعلق چند حقائق پیش کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔ دوسری ویڈيو میں عالمی ادارہ صحت کے ہیلتھ ایمرجنسی پروگرام کی ایپرل بیلر (April Baller) چہرے کے ماسک پہننے کے متعلق ہدایات فراہم کررہی ہيں۔

یہ کوشش اہم کیوں ہے؟ سوشل میڈيا پر اس وقت کرونا وائرس کے متعلق وافر مقدار میں غلط معلومات موجود ہیں، اور آپ کو اکثر سازشی تھیوریز اور نسل پرستی پر مشتمل ویڈيوز نظر آئيں گی جس وجہ سے لوگوں کے لیے درست اور جعلی معلومات کے درمیان امتیاز کرنا مشکل ہوچکا ہے۔ اسی لیے عالمی ادارہ صحت کے لیے ویڈيو کے سب سے بڑے پلیٹ فارم پر معلومات جاری کرنا بہت فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے۔

آگے کیا ہوگا؟ ٹک ٹاک پر کرونا وائرس سرچ کرنے والوں کو کرونا وائرس کے حقائق پر مشتمل بینرز دکھائے جائيں گے، جن میں مزید معلومات کے لیے لنکس بھی شامل ہوں گے۔

تحریر: تانیہ باسو (Tanya Basu)

تصویر: کون کیرم پیلاس (Kon Karempelas) بذریعہ ان سپلیش (Unsplash)

Read in English

Authors

*

Top