Global Editions

GIFs سال 2016 ءکی نو بہترین ٹیکنالوجی

ویسے تو سال 2016 ء ٹیکنالوجی کی ترقی کے حوالے بہت ہی اہمیت کا حامل ہے۔ اس برس کے دوران ورچوئل رئیالٹی عوام کے لئے دستیاب ہوئی، روبوٹک ٹیکنالوجی میں ترقی ہوئی اور اب روبوٹس حجم میں چھوٹے اور سمارٹ ترین ہوتے جا رہے ہیں، اسی برس کے دوران تحقیق کاروں نے یہ بھی جانا کہ کس طریقے سے انسانی خلیوں کو غیر متوازی precision کے ذریعے جانچا جاتا ہے۔ زیر نظر مضمون میں ایم آئی ٹی ٹیکنالوجی ریویو نے سال 2016 کی نو بہترین ٹیکنالوجیز اور ان کے حوالے تیار کی جانیوالی GIFs قارئین کی دلچسپی کے لئے پیش کی جا رہی ہیں۔

1) جو روبوٹ آپ چاہتے ہیں ابھی حقیقت بننے سے دور ہے

اچھی خبر یہ ہے کہ گھریلو صفائی کے لئے روبوٹ کی تیاری کے لئے کاوشیں جاری ہیں اور بری اطلاع یہ ہے اس روبوٹ کی تیاری کے لئے کوششیں نہایت سست روی سے کی جا رہی ہیں لہذا یہ کہا جا سکتا ہے کہ گھروں میں صفائی کے لئے تیار کیا جانا والا روبوٹ ابھی حقیقت نہیں بن سکا ہے۔

2) انسانی خلیوں پر تحقیق کے لئے فیس بک کے بانی مارک زیکربرگ کی فنڈنگ

سماجی رابطوں کی معروف ویب سائیٹ فیس بک کے بانی مارک زیکر برگ نے انسانی خلیوں کی تیاری کے آئیڈیا پر کام کرنے والوںکے لئے فنڈنگ فراہم کرنے والے پہلے ڈونر بن گئے ہیں۔

3) جنرل الیکٹرک کمپنی کی توانائی کے شعبے میں جدت کے لئے سرمایہ کاری

مینوفیکچرنگ شعبے کی بڑی کمپنی جنرل الیکٹرک 73 ملین ڈالرز کی لاگت سے ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ کے لئے سہولیات فراہم کریگی۔ تحقیقات کے لئے قائم کی جانیوالی یہ سہولت 48 برس پرانے ایک پاور سٹیشن کے قریب فراہم کی جا رہی ہے۔ اس فنڈنگ کا مقصد مینوفیکچرنگ کے شعبے میں جدت لانا ہے۔

4) اوکولس نے آخر کار ورچوئل رئیالٹی کے نئے ہینڈ کنٹرولر تیار کر لئے

ورچوئل رئیالٹی سے لطف اندوز ہونے کے لئے سب سے پہلے ہیڈ سیٹ تیار کرنے والی کمپنی اوکولس رفٹ نے اس میدان میں ایک قدم اور آگے بڑھا لیا ہے۔ کمپنی کی جانب سے ورچوئل رئیالٹی سے لطف اندوز ہونے کے لئے ہینڈ کنٹرولر تیار کئے گئے ہیں جس سے ورچوئل رئیالٹی کے شعبے میں مزید جدت اور دلچسپی پیدا ہوئی ہے۔

5) گوگل نے روبوٹ ساز کمپنی کیوں فروخت کی؟

گوگل کی جانب سے روبوٹ سازی کے لئے کمپنی بوسٹن ڈائنیمکس Boston Dynamics کو فروخت کے لئے پیش کرنا اس امر کا اعتراف ہے کہ گوگل کا انسان نما روبوٹ تیار کرنے میں دلچسپی کم ہوتی جا رہی ہے اور اب گوگل اس شعبے کو زیادہ اہمیت نہیں دے رہا۔

6) روبوٹ جو سینے پرونے کا کام بھی کر سکتا ہے

گھریلو سطح پر عموماً سینے پرونے کا کام خواتین کے سپرد ہے اسی طرح ملبوسات سازی کے اداروں میں سلائی کا کام انسان ہی کرتے نظر آتے ہیں۔ کپڑوں کی سلائی کے لئے بھی اب روبوٹس کی تیاری پر کام جاری ہے جس سے فیکٹریوں میں سلائی کا کام بھی روبوٹس سے ہی لیا جائیگا۔

7) فریز ڈرائی میتھڈ سے ادویات کی تیاری

صرف پانی ملائیں۔ یہ نیا فریز ڈرائی میتھڈ ہے جس کی مدد سے ڈی این اے اور دیگر مالیکیولز چھوٹے چھوٹے ذروں میں بدل دیئے جاتے ہیں جنہیں بڑے وسیع پیمانےپر ادویات میں استعمال کیا جاسکتا ہے۔

8 ) فزیکل ورلڈ کو سمجھ کر کارروائی کرنیوالا روبوٹ

ایڈم بیری کی کمپنی سکائی ڈو کی جانب سے ایک ایسا ڈرون تیار کیا گیا ہے جو فزیکل ورلڈ کو سمجھ کر اپنی ذہانت کی بنیاد پر آئندہ کے اقدامات کا فیصلہ کرتا ہے اس کے ساتھ ساتھ اس ڈرون میں یہ بھی صلاحیت ہے کہ وہ حاصل شدہ معلومات کا جائزہ لے کر بھی صورتحال کے مطابق فیصلے لے سکتا ہے۔

9 ) جاپانی روبوٹک کمپنی نے روبوٹک آرم تیار کر لیا

جاپانی روبوٹک کمپنی Fanuc جو فیکٹریوں کے لئے روبوٹک بازو تیار کرتی ہے نے ایک ایسا روبوٹک آرم تیار کر لیا ہے جو کام کے دوران آموزشی عمل کے ذریعے سیکھنے کی صلاحیت بھی رکھتا ہے۔

بونس۔ایپل کی جانب سے سمارٹ گلاسز کی تیاری

معروف ادارہ ایپل، اب Augmented رئیالٹی کے شعبے پر توجہ دینے جا رہی ہے۔

تحریر: جولیا سکلار (Julia Sklar)

Read in English

Authors
Top