Global Editions

سانپ کی طرح لچکدار لیزر روبوٹ تیار

لیزر بیم کا استعمال اب تو کافی حد تک سب کے علم میں آ چکا ہے تاہم اب بھی اس ٹیکنالوجی کے استعمال کے لئے کئی ایسی نئی جہتیں ہیں جنہیں تحقیق کار بروئے کار لانے کی کوشش کرتے رہتے ہیں۔ اب تحقیق کاروں نے لیزر کی مدد سے کسی بھی نیوکلئیر پلانٹ میں سخت اشیاء جن میں سٹیل وغیرہ شامل ہے کو کاٹنے کےلئے سانپ کی طرح بنے لیزر روبوٹ تیار کر لیا ہے یہ سنیک لیزر ایسی ڈیوائس ہے جو کسی بھی پیچیدہ صورتحال اور ماحول میں کام کر سکتی ہے۔ اس سنیک لیزر کو ایک برطانوی کمپنی OC Robotics نے تیار کیا ہے اور اس مشین میں تاروں کا ایک وسیع سلسلہ موجود ہے جو ایک بازو کی طرح کام کرتا ہے اور اس میں جوڑ بھی موجود ہیں۔ یہ روبوٹک آرم کم جگہ اور پیچیدہ جیومیٹریز میں بھی خود کو ایڈجسٹ کر کے کام کرنے اور بہترین نتائج دینے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ یہ روبوٹک آرم اندر سے خالی ہے، OC Robotics اس خلا میں مختلف پرزہ جات نصب کرتی ہے اور اس کے سرے پر لیزر کٹر موجود ہے۔ اس لیزر کٹر کی طاقت پانچ کلوواٹ ہے اور یہ سٹیل کو زمین، ہوا اور پانی میں کاٹنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ اس ڈیوائس کا تازہ ترین تجربہ برطانیہ کے ہی ایک نیوکلئیر پلانٹ میں کیا گیا جو اس وقت استعمال میں نہیں ہے۔ اس پلانٹ میں اس ڈیوائس کی مدد سے ایک سخت ویسل جو کسی نیوکلئیر ری ایکٹر کا حصہ تھا کو کاٹا گیا۔ یہ کہنا غلط نہ ہو گا کہ یہ پہلا روبوٹ ہے جو کسی بھی صورتحال اور مقام پر کام کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور یہ بھی ہے کہ یہ پہلا روبوٹ نہیں ہے جو اس طرح کے مقاصد کے لئے تیار کیا گیا ہے۔ اس سے پہلے بوسٹن ڈائنامکس کی جانب سے اٹلس روبوٹ تیار کیا گیا تھا جو خطرناک مقامات پر کام کر سکتا تھا۔ اسی طرح توشیبا کمپنی نے بھی Submersible روبوٹ تیار کیا گیا تھا جس کی مدد سے جاپان کے فوکوشیما نیوکلئیر پاور پلانٹ میں مرمت کا کام کیا گیا تھا۔ اس طرح کے روبوٹ خطرناک مقامات اور حالات میں انسانوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈالے بغیر کام کر سکتے ہیں۔

تحریر: جیمی کونڈیلفی (Jamie Condliffe)

lasersnake3-compressor

Read in English

Authors

*

Top