Global Editions

لاہور پولیس نے "ریسکیو 15" موبائل ایپلی کیشن متعارف کرا دی

لاہور پولیس نےگلوبل پوزیشنگ سسٹم خصوصیات کی حامل اینڈرائیڈ سمارٹ فونز پر چلنے والی موبائل ایپ متعارف کرا دی ہے۔ اس ایپلی کیشن کے ذریعے عوامی شکایات درج کرائی جا سکیں گی۔ اس ایپلی کیشن میں پولیس ہیلپ لائن پر براہ راست کال کرنے سمیت موقع کی تصویر اور ٹیکسٹ میسج بھیجنے کی سہولت بھی دستیاب ہے۔اس ایپلی کیشن کو ریسکیو ون فائیو کا نام دیا گیا ہے اور اس ایپلی کیشن میں جی پی ایس کی خصوصیت کو بھی شامل کیا گیا ہے۔ لاہور پولیس کے مطابق اس ایپلی کیشن میں جی پی ایس کی خصوصیت شامل کرنے کی وجہ سے پولیس کو جائے وقوعہ کی درست نشاندہی کے ساتھ ساتھ شکایت کنندہ کی لوکیشن کو بھی جانچنے کا موقع میسر آئیگا تاکہ پولیس شہری کی شکایت پر فوری کارروائی کر سکے۔اس ایپلی کیشن میں شہری کی لوکیشن معلوم کرنے کے ساتھ ساتھ کسی بھی ہنگامی صورتحال سے پولیس کو فوری طور پر آگاہ کرنے کے لئے ایس او ایس کال کرنے کی سہولت بھی فراہم کی گئی ہے۔

اس ایپلی کیشن میں ڈراپ ڈاؤن مینو بھی موجود ہے جس کی مدد سے شہری کو یہ سہولت حاصل ہو گی کہ وہ جرم یا حادثے کی نوعیت کو بیان کر سکے۔ اس ایپلی کیشن کو ڈاؤن لوڈ کرنے کے بعد استعمال کنندہ کو چند ضروری معلومات داخل کرانا پڑیں گی جن میں اس کا شناختی کارڈ نمبر اور نزدیکی پولیس سٹیشن شامل ہیں۔ جیسے ہی یہ معلومات ایپ میں داخل کی جائیں گی یہ ایپ ازخود ون فائیو ڈائل کریگی جہاں آپریٹر شکایت کنندہ کی جانب سے داخل کی جانیوالی معلومات کی ازسرنو پڑتال کریگا۔اس ایپلی کیشن میں اضافی طور پر ایس ایم ایس اور آن لائن شکایت سروس کو بھی شامل کیا گیا ہے، یہ سہولت پنجاب پولیس کے پاس پہلے سے ہی دستیاب ہے۔ اس حوالے پولیس کی جانب سے ٹوئیٹر پر جاری کئے جانیوالے ایک اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ اس ایپلی کیشن کے غلط استعمال پر کال کرنے والے کے خلاف فوری کارروائی کی جائیگی۔ فی الحال یہ سروس صرف لاہور کے لئے متعارف کرائی گئی ہے۔

تحریر: سعد ایوب (Saad Ayub)

lahore-police-app

Read in English

Authors
Top