Global Editions

ان کی اختراع معذور افراد کو ہر قسم کی مصنوعات تک زیادہ رسائی فراہم کرسکتی ہے

نام: جان پورٹر (John Porter)
عمر: 33 سال
ادارہ: یونیورسٹی آف واشنگٹن (University of Washington)
جائے پیدائش: امریکہ

جان پورٹر اس بات کو یقینی بنانے کے لیے کام کر رہے ہیں کہ معذور لوگ بھی ویڈیو گیمز (video games) کھیل سکیں۔ ان کے مطابق صحت مند افراد کو صرف یہ مسئلہ ہوتا ہے کہ وہ گیم کھیل سکیں گے یا نہیں، لیکن معذور افراد کو یہ بھی دیکھنا پڑتا ہے کہ وہ یہ گیم کھیل پائيں گے یا نہيں۔

پورٹر کے لیے، جو خود ریڑھ کی ہڈی کے پٹھوں کی ایٹروفی (atrophy) سے دوچار ہیں، یہ رکاوٹیں صرف نظریاتی نہیں ہیں۔ وہ کہتے ہیں کہ ”اس وقت لوگوں کے پاس وہ معلومات نہیں ہیں۔ وہ صرف یہی کر سکتے ہیں کہ 60 ڈالر کی ایک نئی گیم اس امید کے ساتھ خرید لیں کہ وہ اس کو کھیلنے کے قابل ہوں گے“۔

پورٹر، جو مائیکروسافٹ (Microsoft) میں ایک یوزر ایکسپیرینس ڈیزائنر (user experience designer) کے طور پر کام کر رہے ہیں، چاہتے ہیں کہ گیموں کی صنعت رسائی کے مسئلے پرشروع سے غور کرے۔ اس کا مطلب ہے کہ ایسا سسٹم بنایا جائے جس کے ذریعے وہ ان لوگوں کی رسائی جان سکیں جو اعصابی، حسی اور شعوری معذوری سے دوچار ہیں۔ پورٹر معروضی ہاں یا نہ والے سوالات کا ایک مضبوط سیٹ بنا رہے ہیں، جس میںکسی گیم میں تیز بٹن دبانے یا پکڑے رکھنے کی ضرورت  اور بیک وقت تین یا اس سے زیادہ بٹنوں کے مجموعہ کی ضرورت جیسے سوالات پر کام کیا گیا ہے۔

پورٹر امید کرتے ہیں کہ ان کا سسٹم ڈیویلپرزکو اپنی گیموں کے نمونوں کے ابتدائی مراحل پر سوچنے پر مجبور کر دے گا۔ ان کا کہنا ہے کہ ”جیسے جیسے وقت گزرتا جائے گا، لوگوں کا کام کرنے کا طریقہ بھی بدلنا شروع ہوجائے گا۔” اگرچہ یہ گیمنگ کے معاملے میں پرجوش ہیں، لیکن وہ ساتھ اس بات کا بھی اعتراف کرتے ہيں کہ ان کے کام کے مضمرات اس سے بھی زیادہ وسیع ہیں۔ بقول ان کے، ”ہم یہ تحقیق کرنا شروع کرسکتے ہیں کہ یہ معلومات کس طرح سے ہمارے آلات اور ڈیجیٹل ماحول کو ہماری ضروریات اور قابلیت کے مطابق ڈھالا جاسکتا ہے؟ یہ معاون ٹیکنالوجی کی اگلی منطقی حد ہے“۔

تحریر: ڈین سولومن (Dan Solomon)
مترجم: ماہم مقصود

Read in English

Authors

*

Top