Global Editions

اس ٹیکنالوجی سے بجلی کے گرڈز کو بہتر بنایا جارہا ہے

الیزابیتھ نیکو (Elizabeth Nyeko) نے افریقہ کے دیہی علاقوں کو سستی اور موثر بجلی فراہم کرکے ان کا ایک بہت بڑا مسئلہ حل کر ڈالا ہے۔

نیکو لندن میں واقع ماڈيولیرٹی گرڈ (Modularity Grid) نامی سٹارٹ اپ کمپنی کی سی ای او ہیں، اور ان علاقہ جات میں جہاں بجلی کے گرڈز کی وسیع کرنا بہت مہنگا ثابت ہوتا ہے، چھوٹے پیمانے پر بجلی کی پیداواری اور تقسیم کے نظاموں کی کارکردرگی کو بہتر بنانے والی ٹیکنالوجیز پر کام کررہی ہيں۔ تاہم اس قسم کے گرڈز میں بھی کچھ خامیاں موجود ہيں۔ ماضی میں نیکو حیاتیاتی توانائی استعمال کرنے والے گرڈ بنانے والی کمپنی مینڈولس انرجی (Mandulis Energy) کی بھی شریک بانی رہ چکی ہیں، اور انہيں اس دوران معلوم ہوا کہ انفرادی صارفین کے بجلی کے استعمال کی پیمائش کرنا بہت مشکل ثابت ہوسکتا ہے، جو توانائی کی ضرورت سے زيادہ پیداوار، ایندھن کے غیرموثر استعمال اور بجلی کی قیمت میں اضافے کا سبب بنتا ہے۔

ماڈیولیرٹی گرڈ میں نیکو نے کلاؤڈ پر چلنے والا ایسا ذہین پلیٹ فارم تیار کیا ہے جس کی مدد سے بجلی کے انفرادی استعمال کی پیمائش اور پیشگوئی ممکن ہے، جس کے بعد یہ اضافی بجلی مستقل توانائی کی ضرورت رکھنے والے مخصوص صارفین کو فراہم کردی جاتی ہے۔ نیکو یوگانڈا میں مینڈولس کی سائٹ پر ماڈیولیرٹی گرڈ کی ٹیکنالوجی کی ٹیسٹنگ کررہی ہیں، اور انہیں معلوم ہوا کہ ان صارفین میں چاول کی مل شامل ہے، جو گرڈ کے ایندھن کے طور پر استعمال ہونے والے چاول کے چھلکے بھی فراہم کرتی ہے۔ ان کا کہنا ہے "اگر ہم صارفین کو صرف اتنی ہی بجلی فراہم کریں جتنی ان کو ضرورت ہے، اور باقی بجلی ایسی چیز کو فراہم کریں جس سے پوری کمیونٹی کو فائدہ ہو، تو کم آمدنی رکھنے والے افراد کو بھی گرڈز تک رسائی فراہم کی جاسکتی ہے۔"

نیکو شمالی یوگانڈا میں پیدا ہوئی تھیں، لیکن خانہ جنگی کی وجہ سے انہوں نے بچپن ہی میں اپنا ملک چھوڑدیا۔ اب وہ گرڈ کے دوسرے فراہم کنندگان کو اپنی ٹیکنالوجی فروخت کرنے کی کوشش کررہی ہيں۔ اس کے علاوہ، وہ افریقہ میں توانائی کے پراجیکٹس پر کام کرنے کے لیے ٹوٹال اور ونچی اینرجیز کے ساتھ شراکت داری بھی شروع کرنے والی ہیں۔ ان کا خیال ہے کہ ان کی ٹیکنالوجی سے بجلی کے قومی گرڈز کو نہ صرف افریقہ میں بلکہ دنیا بھر میں زيادہ موثر بنایا جاسکے گا۔

تحریر: جوناتھن ڈبلیو روزن (Jonathan W. Rosen)

Read in English

Authors
Top