Global Editions

انہوں نے ایک روبوٹک ہاتھ کو خود سے چیزیں کرنا سکھایا ہے

نام: ووج سیچ زیریمبا (Wojciech Zaremba)

عمر: 30 سال

ادارہ: اوپن اے آئی (OpenAI)

جائے پیدائش: پولینڈ

ووج سیچ زیریمبا نے ایک ایسی ٹیم کی سربراہی کی ہے جس نے مشین لرننگ کی مدد سے ایک روبوٹک ہاتھ کو خود کو مختلف اقسام کے ماحولوں بلاکس اٹھانا سکھایا ہے۔ اس روبوٹ کو خود سے احکامات کے جواب میں اپنی روبوٹک انگلیوں سے ایک بلاکس پکڑنا اور اسے گھمانا سیکھنے کا کام سونپا گیا تھا۔

زیریمبا نے انسانی دماغوں میں استعمال ہونے والے نیٹورک کی نقالی کرنے والے کمپیوٹر پروگرام، یعنی نیورل نیٹورک، کی مدد سے اس روبوٹ کی پروگرامنگ کی تھی۔

ماضی میں روبوٹکس میں ری انفارسمنٹ لرننگ کا استعمال تو کیا جاچکا ہے لیکن اب تک اسے روبوٹک ہاتھ جنتی پیچیدہ چیز میں بروئے کار نہيں لایا گيا ہے۔ اس کی پہلی وجہ تویہ تھی کہ اس میں شامل ڈھیروں کام کروانے کے لیے کئی سو سال کا تجربہ درکار ہوتا۔ دوسری وجہ یہ ہے کہ ورچول دنیاؤوں میں تربیت حاصل کرنے والے روبوٹس اکثر سیمولیشنز اور حقیقی دنیا کے درمیان فرق کی وجہ سے حقیقت میں کام کرنے کے دوران ناکام ثابت ہورہے تھے۔

زیریمبا مصنوعی ذہانت کے ریسرچ گروپ، اوپن اے آئی کے شریک بانی ہیں، اور ان کے مطابق کسی ورچول ماحول کے حالات تبدیل کرنے سے نیورل نیٹورک کو حقیقی دنیا کی بے ترتیبی سے نمٹنے میں زيادہ آسانی ہوگی۔

بلاک کے وزن اور انگلیوں کی رگڑ جیسی 254 خصوصیات میں بے ترتیبی پیدا کرنے سے تربیت مکمل کرنے کے بعد روبوٹک ہاتھ کی حقیقی دنیا میں کارکردگی زیادہ بہتر ثابت ہوئی۔

تحریر: ایریکا بیراس (Erika Beras)

Read in English

Authors

*

Top