Global Editions

چینی خلائی جہاز چاند پر کامیابی سے پہنچ گیا ہے

چین کے خلائی لینڈر کی چاند پر لینڈنگ کی ایک اینیمیشن۔ کریڈٹ : سی این ایس اے
یہ خلائی جہاز جلد ہی چاند پر قمری مواد کے لئے کھدائی شروع کردے گا۔

چین کا نیا خلائی جہاز Chang’e 5 چاند پر پہنچنے میں کامیاب ہوگیا ہے۔ اس مہم کا مقصد قمری پتھر اور مٹی کے نمونے حاصل کر کے انہيں زمین پر لانا ہے۔ اگر یہ خلائی جہاز ان نمونوں کے ساتھ زمین پر پہنچ جائے تو یہ چین کی پہلی مہم ہوگی جو قمری مواد کے حصول میں کامیاب ہوئی ہے۔

تفصیلات: چین نے23 نومبر کو Change 5 کی مہم لانچ کی تھی۔ کچھ روز بعد چاند کے اطراف گردش کے دوران Chang’e 5 دو حصوں میں تقسیم ہوگيا۔ پہلا حصہ ایک آربٹر (orbiter) اور واپسی کے کیپسیول پر مشتمل تھا، جو گردش جاری رکھے گا۔ دوسرا حصہ ایک لینڈر (lander) اور چڑھائی کی گاڑی پر مشتمل تھا، جو چاند کی جانب بڑھ گیا۔

آج لینڈر چاند کے قریبی حصے کے مغربی کونے پر واقع غیرفعال آتش فشاں مونس رومکر (Mons Rümker) کے قریب لینڈ کر چکا ہے۔ اندازوں کے مطابق یہاں موجود قمری پتھروں کی عمر ان پتھروں سے ایک ارب سال کم ہے جنہیں چار دہائی قبل اپولو (Apollo) مہم کے ذریعے واپس لایا گيا تھا۔ Chang’e 5 چاند کی سطح پر لینڈ کرنے کے فوراً بعد قمری نمونوں کے حصول کے لیے کھدائی شروع کردے گا۔

قمری پتھروں کی کھدائی: Chang’e 5 چاند سے کم از کم چار پونڈ مواد حاصل کرنے کی کوشش کرے گا۔ اس میں سے تقریباً ایک چوتھائی مواد زیرزمین (یعنی 6.5 فٹ کی گہرائی پر) نمونوں پر اور دیگر تین چوتھائی حصہ سطح سے حاصل کردہ نمونوں پر مشتمل ہوگا۔ Chang’e 5 کے حساس پرزوں کو قمری رات کی ٹھنڈ سے حفاظت فراہم کرنے کے لیے ہیٹنگ  یونٹس سے آراستہ نہيں کیا گيا ہے، اسی لیے اس مہم کو قمری رات شروع کرنے سے پہلے (یعنی زمین پر 14 دنوں سے قبل) نمونوں کے حصول کا کام مکمل کر کے زمین کی طرف واپسی کا سفر کرنا ہوگا۔

48 گھنٹے بعد چڑھائی کی گاڑی قمری نمونوں کو آربیٹر تک پہنچائے گی، جو انہيں واپسی کے کیپسول میں ڈال کر کئی روز بعد زمین لوٹے گا۔ زمین کے قریب پہنچنے پر واپسی کا کیپسیول آربیٹر سے علیحدہ ہوجائے گا اور 17 دسمبر کو مونگولیا کے قریب لینڈ کرے گا۔

چین کی تمام خلائی مہموں کے متعلق مختصر تفصیلات: Chang’e 5 چین کا پہلا خلائی جہاز نہيں ہے۔ اس سے پہلے چین نے دو روورز (rovers) سمیت چار کامیاب روبوٹک مہمیں لانچ کی ہیں۔ تاہم Chang’e 5 چاند سے قمری نمونے حاصل کرنے والا پہلا چینی خلائی جہاز ہوگا۔ اس سے پہلے صرف امریکہ اور سوویت یونین اس قسم کی مہم میں کامیاب ہوئے ہیں۔ اگر یہ چینی مہم کامیاب ہوجائے تو یہ 44 سال میں قمری نمونے حاصل کرنے والا پہلا خلائی جہاز ہوگا۔آخری کوشش 1976ء میں سوویت یونین کے Luna 24 نامی خلائی جہاز نے کی تھی۔

چین کا 2023ء میں Chang’e 6 لانچ کرنے کا ارادہ ہے۔ اگر Chang’e 5 ناکام رہا تو Chang’e 6 مونس روکر سے نمونے حاصل کرنے کی دوبارہ کوشش کرے گا۔ تاہم Chang’e 5 کے کامیاب ہونے کی صورت میں Chang’e 6 چاند کے قطب جنوبی کا رخ کرے گا۔

تحریر: نیل وی پٹیل (Neel V. Patel)

Read in English

Authors

*

Top