Global Editions

مصنوعی ذہانت

ای کامرس کمپنیاں ایک عالمی وبا کے دوران اپنی آمدنی میں کس طرح اضافہ کررہی ہیں؟

ای کامرس کمپنیاں ایک عالمی وبا کے دوران اپنی آمدنی میں کس طرح اضافہ کررہی ہیں؟

ایک طرف دنیا بھر کی نظریں امریکی انتخابات پر ٹکی ہوئی تھیں، لیکن دوسری طرف، چین کی توجہ سال کے سب سے بڑے شاپنگ فیسٹیول پر تھی۔ یکم نومبر سے 11 نومبر کے درمیان منعقد ہونے والی سنگلز ڈے (Single’s Day) کی اس سالانہ سیل میں چین کی دو بڑی ای کامرس کمپنیوں، علی بابا …مزید پڑ ھیں

ہم ایک دن ڈیپ لرننگ کی مدد سے سب کچھ کر سکیں گے

موجودہ مصنوعی ذہانت کے انقلاب کی بنیاد امیج نیٹ (ImageNet) کے سالانہ مقابلے میں رکھی گئی، جس میں مختلف ٹیمیں ایک ہزار مختلف اشیاء پہچاننے والے روبوٹس بنانے کی کوشش کرتی ہیں۔ 2010ء میں شروع ہونے والے اس مقابلے میں دو سال تک تو کسی بھی ٹیم کی درستی 75 فیصد تک بھی نہيں پہنچ …مزید پڑ ھیں

ہم اس وقت مصنوعی ذہانت کے لیے تیار نہيں ہیں

ایم آئی ٹی کے کمپیوٹر سائنس اور آرٹیفیشیئل انٹیلی جینس لیباریٹری (Computer Science and Artificial Intelligence Laboratory) کی پروفیسر ریجینا بارزیلے (Regina Barzilay) سکوئیرل اے آئی ایوارڈ فار آرٹیفیشیئل انٹیلی جینس فار دی بینیفٹ آف ہیومینٹی (Squirrel AI Award for Artificial Intelligence for the Benefit of Humanity) جیتنے والی پہلی مصنوعی ذہانت کی ریسرچر ہیں۔ …مزید پڑ ھیں

مصنوعی ذہانت کی مدد سے منی لانڈرنگ کے تیزی سے بدلتے ہوئے طریقوں کا کس طرح مقابلہ کیا جاسکتا ہے؟

جب کرونا وائرس کے باعث دنیا بھر کے کاروبار بند ہوگئے تو کاروبار کے مالکان اور صارفین تو پریشان ہوئے ہی، لیکن جرائم پیشہ افراد کو بھی کئی مشکلات کا سامنا رہا۔ ان کی سب سے بڑی پریشانی یہی تھی کہ رقم کی ہیرا پھیرا کس طرح جاری رکھی جائے؟ جرائم سے حاصل کردہ منافع …مزید پڑ ھیں

مصنوعی ذہانت کے سسٹمز کے نسلی تعصب کو کس طرح ختم کیا جاسکتا ہے؟

نام: انیولووا ڈیبرا راجی (Inioluwa Deborah Raji) عمر: 24 سال ادارہ: اے آئی ناؤ انسٹی ٹیوٹ (AI Now Institute) جائے پیدائش: نائیجیریا انیولووا ڈیبرا راجی بتاتی ہیں کہ انہوں نے مصنوعی ذہانت پر ریسرچ اس وقت شروع  کی جب انہيں ان سسٹمز کی ایک بہت بڑی خامی کا احساس ہوا۔ اپنے کالج کے زمانے میں …مزید پڑ ھیں

مشین لرننگ کے ذریعے پارکنسنز کا علاج کس طرح ممکن ہے؟

نام: کیتھارینا وولز (Katharina Volz) عمر: 33 سال ادارہ: اوکیمز ریزر (OccamzRazor) جائے پیدائش: جرمنی 2016ء میں کیتھارینا وولز کو خبر ملی کہ ان کے ایک قریبی رشتہ دار پارکنسنز (Parkinson’s) کا شکار ہیں۔ انہوں نے حال ہی میں سٹینفورڈ یونیورسٹی سے اپنا پی ایچ ڈی مکمل کیا تھا اور وہ اس وقت سٹیم سیلز …مزید پڑ ھیں

اب انجنیئرنگ سمجھے بغیر بھی مصنوعات ڈیزائن کرنا ممکن ہے

نام: ایڈریانا شلز (Adriana Schulz) عمر: 34 سال ادارہ: یونیورسٹی آف واشنگٹن جائے پیدائش: برازیل ایڈریانا شلز نے ایسے ٹولز ایجاد کیے ہیں جن کی مدد سے عام صارفین میکانکس، جیومیٹری یا پیچیدہ انجنیئرنگ کی سمجھ بوجھ رکھے بغیر روبوٹس سے لے کر کبوترخانوں تک، کئی مختلف قسم کی چیزيں بناسکتے ہيں۔ ان ٹولز کو …مزید پڑ ھیں

انسانی دماغ کو مشینوں کے ساتھ جوڑنے والی کمپیوٹر چپس ایجاد کی جارہی ہیں

نام: ڈونگجن سیو (Dongjin Seo) عمر: 31 سال ادارہ: نیورالنک (Neuralink)  جانے پیدائش: امریکہ سات سال پہلے ڈونگجن سیو عرف ”ڈی جے“ نے کہا تھا کہ وہ ہمیشہ ہی ایسا سائنسدان بننا چاہتے تھے جس کے لیے انجنیئرنگ کے ذریعے ”دنیا بدلنا بائیں ہاتھ کا کھیل ہو-“ وہ اس وقت یونیورسٹی آف کیلیفورنیا، برکلے، کے …مزید پڑ ھیں

اب کم آمدنی والے ممالک میں رہائش پذیر افراد کے لیے مصنوعی بازو اور ٹانگیں دستیاب ہوسکتے ہيں

نام: محمد ضاؤآفی (Mohamed Dhaouafi) عمر: 28 سال ادارہ: کیور بائیونکس (Cure Bionics) جائے پیدائش: تیونس چار سال پہلے یونیورسٹی کے ایک مقابلے کے دوران، محمد ضاؤآفی کو معلوم ہوا کہ ان کی ٹیم کے ایک رکن کا کزن بغیر بازوؤں کے پیدا ہوا تھا، اور اس کے گھر والے مصنوعی بازو لگوانے کی سکت …مزید پڑ ھیں

خودکار گاڑيوں کو دیکھنے میں مدد کے لیے نیورل نیٹورکس کا استعمال کیا جارہا ہے

نام: ایندریج کارپتھی (Andrej Karpathy) عمر: 33 سال ادارہ: ٹیسلا (Tesla) جائے پیدائش: سلوواکیا عرصہ دراز سے کمپیوٹر سائنسدان یہی خواب دیکھ رہے ہيں کہ کمپیوٹرز میں کسی طرح ”دیکھنے“، یعنی چیزوں کو دیکھنے اور سمجھنے کی صلاحیت پیدا ہوجائے۔ لیکن اینڈریج کارپتھی سے پہلے بہت ہی کم سائنسدان تھے جو اس مقصد میں کامیاب …مزید پڑ ھیں

Top