Global Editions

اردو فیچرز

پاکستان میں کرونا وائرس: عید کے حفاظتی قواعد کی تصدیق، انفیکیشنز کی تعداد میں کمی جاری

پاکستان میں کرونا وائرس: عید کے حفاظتی قواعد کی تصدیق، انفیکیشنز کی تعداد میں کمی جاری

اعداد و شمار: جمعہ کی صبح تک، پاکستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 243،599 تک پہنچ گئی تھی، جبکہ اب تک 149،092 افراد صحتیاب ہوچکے ہيں۔ اس وقت سب سے زيادہ، یعنی 100,900 کیسز، صوبہ سندھ میں سامنے آئے، جبکہ صوبہ پنجاب سے 85,261، بلوچستان سے 11,099، خیبرپختونخواہ سے 29,406، اسلام آباد سے …مزید پڑ ھیں

پاکستانی حکومت کے مطابق انفیکشنز کی تعداد میں کمی میں انتظامی اقدام کا بہت بڑا ہاتھ ہے

اعداد و شمار: پاکستان میں کرونا وائرس کو شروع ہوئے پانچ مہینے ہوچکے ہيں۔ جمعہ کی دوپہرتک ملک پھر میں کیسز کی تعداد 221,896 تک پہنچ گئی ہے، جبکہ 4،551 اموات واقع ہوچکی ہیں۔ اس وقت سب سے زيادہ، یعنی 89,225 کیسز صوبہ سندھ میں سامنے آئے ہيں، جبکہ صوبہ پنجاب میں 78,956، بلوچستان سے …مزید پڑ ھیں

پاکستان میں سمارٹ لاک ڈاؤن رنگ لا رہا ہے، کرونا وائرس کے یومیہ انفیکشنز میں کمی

اعداد و شمار: جمعے کی دوپہرتک، پاکستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 195,745 تک پہنچ گئی تھی، جبکہ 3,962 افراد کی موت واقع ہوچکی تھی۔ اس وقت سب سے زیادہ کیسز، یعنی 75,168 کیسز، صوبہ سندھ میں سامنے آئے ہيں، جبکہ صوبہ پنجاب سے 71,987، خیبر پختونخواہ سے 24,303، بلوچستان سے 9,946، اسلام …مزید پڑ ھیں

پنجاب کے تعلیمی ادارے ریموٹ تعلیم کی فراہمی میں کس حد تک کامیاب ثابت ہوئے ہیں؟

13 مارچ کو پاکستان کے آبادی کے لحاظ سے سب سے بڑے صوبے پنجاب کے سکولوں سے گھر لوٹنے والے طلباء کو اندازہ نہیں تھا کہ وہ اگلے چند مہینوں تک دوبارہ سکول نہیں جا پائيں گے اور تعلیم کی فراہمی کا سلسلہ پوری طرح بدل کر رہ جائے گا۔ جب مارچ میں covid-19 کے …مزید پڑ ھیں

کرونا وائرس: عالمی ادارہ صحت کی تنقید، حکومت کا سمارٹ لاک ڈاؤن اور کیسز کی تعداد میں اضافہ

اعداد و شمار: جمعہ کی رات تک پاکستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 167،956 تک پہنچ چکی تھی، جبکہ 3،378 افراد کی موت واقع ہوچکی تھی۔ اس وقت، سب سے زيادہ یعنی 65،163 کیسز صوبہ سندھ میں جبکہ پنجاب میں 61،678، بلوچستان میں 8،998، اور خیبر پختونخواہ میں 20،182 کیسز سامنے آئے ہيں۔ …مزید پڑ ھیں

فیس بک پوسٹس کی ماڈریشن کے لیے 30,000 افراد کی ضرورت ہے

فرض کریں کہ فیس بک پر کسی قسم کی ماڈریشن نہیں ہوتی اور کوئی کچھ بھی لکھ سکتا ہے۔ اگر ایسا ہوتا تو ہمیں فیس بک پر ہراس پھیلانے والے اور نسل پرست مواد کی بھرمار نظر آتی۔ کئی صارفین تنگ آ کر ویب سائٹ کا استعمال ترک کر دیتے اور پھر کمپنیاں فیس بک …مزید پڑ ھیں

کرونا وائرس کے باعث پاکستانیوں کے ڈیٹا کا تحفظ مزید خطرے میں

جون 4 کو پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی اور سول سوسائٹی کے درمیان ایک میٹنگ منعقد ہوئی تھی، جس میں حقوق کے گروپس کے ممبران شامل نہيں تھے۔ ڈیجٹیل حقوق کے کئی کارکنان نے مطالبہ کیا ہے کہ اس میٹنگ کے دوران کیے جانے والے تمام فیصلے کی نظرثانی کے لیے مشاورت ‘سیٹیزنز پروٹیکشن (اگینسٹ آن …مزید پڑ ھیں

سماجی روابط محدود کرنا لاک ڈاؤن سے نکلنے کا بہترین طریقہ ہو سکتا ہے

کئی لوگوں کے لیے لاک ڈاؤن کے دوران اپنے دوستوں یا گھر والوں کے ساتھ گھر میں بند ہونا ان کی تنہائی کا احساس کم کرنے میں بہت معاون ثابت ہوا ہے۔ ان گروپس کو ببلز (bubbles) کہا جاتا ہے اور کمپیوٹر کی نئی سیمولیشنز کے مطابق یہ حکمت عملی کرونا وائرس کے پھیلاؤ کی …مزید پڑ ھیں

پاکستان میں لاک ڈاون میں نرمی کا نتیجہ: روزانہ ہزاروں نئے کیسز سامنے آ رہے ہیں

اعداد وشمار: پاکستان میں کرونا وائرس نے 100 دن پورے کر لیے ہیں۔ پاکستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد کچھ روز قبل 100،000 سے تجاوز کر چکی تھی اور جمعہ کی صبح تک متاثرہ افراد کی تعداد 125,933 تک جا پہنچی، جبکہ 2,463 افراد کی موت واقع ہوچکی ہے۔ صوبہ پنجاب میں 47,382، …مزید پڑ ھیں

لاک ڈاؤنز کی وجہ سے یورپ میں 30 لاکھ اموات کی روک تھام ممکن ہوئی

ریسرچرز کی کیلکولیشنز کے مطابق، یورپ میں نافذ کردہ لاک ڈاؤنز کی وجہ سے مئی کی ابتداء تک 31 لاکھ اموات کی روک تھام ممکن ہوئی ہے۔ لوگوں کی نقل و حمل پر پابندی اور سماجی دوری کی بدولت کرونا وائرس کے پھیلاؤ میں 81 فیصد کمی ممکن ہوئی۔ ان اقدام سے وبا کی افزائش …مزید پڑ ھیں

Top