Global Editions

اینٹی ایجنگ کے متنازعہ ہونے کے باوجود بھی اس میں سرمایہ کاری جاری

لوگوں کو جوان رکھنے کی ٹیکنالوجی اب تک پوری طرح ثابت نہيں ہوپائی ہے، لیکن اس کے باوجود ایک سٹارٹ اپ کمپنی اس ٹیکنالوجی کو آگے بڑھانے کی کوششیں کررہی ہے۔

“اگر عمر میں اضافہ اتنا برا نہ ہو تو؟”

یہ سوال ہارورڈ یونیورسٹی سے نکلنے والی ایک نئی سٹارٹ اپ کمپنی نے اٹھایا ہے، جو اینٹی ایجنگ کے ایک متنازعہ انکشاف پر لاکھوں ڈالر کی سرمایہ کاری کرنے کا ارادہ رکھتی ہے۔

سان فرانسسکو میں واقع الیوین (Elevian) نامی یہ سٹارٹ اپ کمپنی دیکھنا چاہتی ہيں کہ کیا GDF11 نامی ایک پروٹین کے انجیکشنز روزانہ استعمال کرنے سے “جسم کی خود کو بحال کرنے کی صلاحیت کو فروغ دیا جاسکتا ہے”، اور کیا آگے چل کر اکلیلی شریانوں کے مرض، الزہائمرز اور سارکوفینیا، جس میں پٹھے ضائع ہوتے ہيں، کا علاج ممکن ہوسکے گا؟

یہ کمپنی کئی سالوں پرانی تحقیق کو آگے بڑھا رہی ہے جس کے مطابق جوان اور بوڑھے چوہوں کے خون کو ملانے کے بعد بوڑھے چوہوں جوان لگنا شروع کردیتے ہيں۔

الیویان کی شریک بانی، بارورڈ کی بائیولوجسٹ ایمی ویجرز (Amy Wagers) نے بعد میں یہ نتیجہ نکالا کہ اس کی وجہ جوان جانوروں کے خون میں پایا جانے والا پروٹین GDF11 ہے۔

ان کے علاوہ ہارورڈ کے دوسرے ریسرچرز نے بھی بتایا کہ بوڑھے لوگوں میں اس پروٹین کی مقدار کم ہوجاتی ہے، جس کا مطلب یہ ہوا کہ اس کی مقدار میں اضافہ کرنے سے ضعیف العمری کا مقابلہ ممکن ہے۔

کئی لوگوں کو ویجر کے انکشافات میں دلچسپی تو ہوئی، لیکن بڑی دوا فروش کمپنیاں ان کی تحقیق کو دہرانے میں ناکام رہیں۔ مثال کے طور پر 2015ء میں منعقد ہونے والی ایک تحقیق میں نووارٹس کے سائنسدانوں کو معلوم ہوا کہ GDF11 کی مقدار عمر کے ساتھ کم نہيں ہوتی، اور اس سے پٹھوں کی تخلیق نو میں رکاوٹ پیدا ہوتی ہے۔

مینیسوٹا میں واقع میو کلنک کے ایسوسیٹ پروفیسر اور صحت مند ایجنگ اور آزادانہ زندگی گزارنے سے تعلق رکھنے والے پروگرام کے ڈائریکٹر نیتھن لے براسیر (Nathan LeBrasseur) کہتے ہيں “اس وقت شائع شدہ مواد میں اتفاق رائے ہے کہ GDF11 کے خراب یا بوڑھے پٹھوں میں نئے زندگی ڈالنے کے متعلق ثبوت موجود نہيں ہے۔”

اس کمپنی کا کہنا ہے کہ وہ جلد ہی اپنی ادویات کے متعلق ثبوت پیش کریں گے۔ ویجرز کے علاوہ، الیویان کے بانیوں میں ہارورڈ سے تعلق رکھنے والے ماہرین حیاتیات لی ریوبن (Lee Rubin) اور رچ لی (Rich Lee) شامل ہیں۔

الیویان کے سی ای او مارک ایلن (Mark Allen) کہتے ہيں “ہم نے خود کو اور اپنے سرمایہ کاروں کو مطمئن کردیا ہے۔ اب بس سائنسی دنیا کو مطمئن کرنا رہ گیا ہے۔”

الیویان کے مطابق وہ 55 لاکھ ڈالر کی سیڈفنڈنگ حاصل کرنے میں کامیاب رہے ہیں۔ اس مرحلے کی سربراہی پیٹر ڈیامینڈس (Peter Diamandis) کی سرمایہ کاری کی کمپنی بولڈ کیپیٹل (Bold Capital) نے کی تھی، جن کے کارناموں میں ایکس پرائز فاؤنڈیشن (X Prize Foundation) اور سنگولیریٹی یونیورسٹی (Singularity University) شامل ہیں۔

تحریر: کیرن وائن ٹروب (Karen Weintraub)

Read in English

Authors
Top