Global Editions

Most Recent Articles

اب کم آمدنی والے ممالک میں رہائش پذیر افراد کے لیے مصنوعی بازو اور ٹانگیں دستیاب ہوسکتے ہيں

نام: محمد ضاؤآفی (Mohamed Dhaouafi) عمر: 28 سال ادارہ: کیور بائیونکس (Cure Bionics) جائے پیدائش: تیونس چار سال پہلے یونیورسٹی کے ایک مقابلے کے دوران، محمد ضاؤآفی کو معلوم ہوا کہ ان کی ٹیم کے ایک رکن کا کزن بغیر بازوؤں کے پیدا ہوا تھا، اور اس کے گھر والے مصنوعی بازو لگوانے کی سکت …مزید پڑ ھیں

خودکار گاڑيوں کو دیکھنے میں مدد کے لیے نیورل نیٹورکس کا استعمال کیا جارہا ہے

نام: ایندریج کارپتھی (Andrej Karpathy) عمر: 33 سال ادارہ: ٹیسلا (Tesla) جائے پیدائش: سلوواکیا عرصہ دراز سے کمپیوٹر سائنسدان یہی خواب دیکھ رہے ہيں کہ کمپیوٹرز میں کسی طرح ”دیکھنے“، یعنی چیزوں کو دیکھنے اور سمجھنے کی صلاحیت پیدا ہوجائے۔ لیکن اینڈریج کارپتھی سے پہلے بہت ہی کم سائنسدان تھے جو اس مقصد میں کامیاب …مزید پڑ ھیں

جوہری ری ایکٹرز اور ڈی سیلینیشن پلانٹس پر انحصار کرنے والے ممالک ڈیٹا کی مدد سے بحرانوں کے لیے کس طرح تیاری کر سکتے ہیں؟

نام: غناء الحنائی (Ghena Alhanaee) عمر: 30 سال ادارہ: یونیورسٹی آف سدرن کیلیفورنیا جائے پیدائش: متحدہ عرب امارات یونیورسٹی آف سدرن کیلیفورنیا میں اپنے پی ایچ ڈی کے دوران، غناء الحنائی کو یہ جان کر بہت پریشانی ہوئی کہ ان کے آبائی ملک متحدہ عرب امارات سمیت خلیج فارس کے دوسرے ممالک آفات کے لیے …مزید پڑ ھیں

نیوز بلیٹن

میگزین

تازہ ترین

اب کم آمدنی والے ممالک میں رہائش پذیر افراد کے لیے مصنوعی بازو اور ٹانگیں دستیاب ہوسکتے ہيں

نام: محمد ضاؤآفی (Mohamed Dhaouafi) عمر: 28 سال ادارہ: کیور بائیونکس (Cure Bionics) جائے پیدائش: تیونس چار سال پہلے یونیورسٹی کے ایک مقابلے کے دوران، محمد ضاؤآفی کو معلوم ہوا کہ ان کی ٹیم کے ایک رکن کا کزن بغیر بازوؤں کے پیدا ہوا تھا، اور اس کے گھر والے مصنوعی بازو لگوانے کی سکت …مزید پڑ ھیں

خودکار گاڑيوں کو دیکھنے میں مدد کے لیے نیورل نیٹورکس کا استعمال کیا جارہا ہے

نام: ایندریج کارپتھی (Andrej Karpathy) عمر: 33 سال ادارہ: ٹیسلا (Tesla) جائے پیدائش: سلوواکیا عرصہ دراز سے کمپیوٹر سائنسدان یہی خواب دیکھ رہے ہيں کہ کمپیوٹرز میں کسی طرح ”دیکھنے“، یعنی چیزوں کو دیکھنے اور سمجھنے کی صلاحیت پیدا ہوجائے۔ لیکن اینڈریج کارپتھی سے پہلے بہت ہی کم سائنسدان تھے جو اس مقصد میں کامیاب …مزید پڑ ھیں

جوہری ری ایکٹرز اور ڈی سیلینیشن پلانٹس پر انحصار کرنے والے ممالک ڈیٹا کی مدد سے بحرانوں کے لیے کس طرح تیاری کر سکتے ہیں؟

نام: غناء الحنائی (Ghena Alhanaee) عمر: 30 سال ادارہ: یونیورسٹی آف سدرن کیلیفورنیا جائے پیدائش: متحدہ عرب امارات یونیورسٹی آف سدرن کیلیفورنیا میں اپنے پی ایچ ڈی کے دوران، غناء الحنائی کو یہ جان کر بہت پریشانی ہوئی کہ ان کے آبائی ملک متحدہ عرب امارات سمیت خلیج فارس کے دوسرے ممالک آفات کے لیے …مزید پڑ ھیں

ڈی سیلینیشن پلانٹس کی خامیاں دور کرنے کے لیے ایک نیا سسٹم سامنے آگیا ہے

نام: ڈیوڈ وارسنگر (David Warsinger) عمر: 32 سال ادارہ: پرڈیو یونیورسٹی جائے پیدائش: امریکہ ڈیوڈ وارسنگر کا خیال ہے کہ وہ ایک ایسی ٹیکنالوجی ایجاد کرنے میں کامیاب ہوگئے ہیں جس کی مدد سے اکیسویں صدی کے سب سے بڑے ماحولیاتی چیلنج، یعنی پانی کی قلت، کا حل ممکن ہے۔ اس وقت دنیا کی تقریباً …مزید پڑ ھیں

کوانٹم کمپیوٹنگ کی غلطیاں کس طرح کم کی جاسکتی ہيں؟

 نام: زلیٹکو مینیو (Zlatko Minev) عمر: 30 سال ادارہ: آئی بی ایم کوانٹم ریسرچ (IBM Quantum Research)، ٹی جے واٹسن (TJ Watson) جائے پیدائش: بلغاریہ زلیٹکو مینیو نے کوانٹم فزکس کا ایک ایسا اصول دریافت کیا ہے جس نے نیلز بوہر (Niels Bohr) اور البرٹ آئینسٹائن (Albert Einstein) جیسے ماضی کے بڑے سائنسدانوں کو بھی …مزید پڑ ھیں

طبی امپلانٹس کو ادویات کے بغیر کس طرح موثر بنایا جاسکتا ہے؟

نام: ایمیئر ڈولن (Eimear Dolan) عمر: 32 سال ادارہ: نیشنل یونیورسٹی آف آئیرلینڈ گیلوے (National University of Ireland Galway) جائے پیدائش: آئیرلینڈ ایمیئر ڈولن کو ٹائپ 1 ذیابیطس کے علاج کے لیے استعمال ہونے والے طبی امپلانٹس پر کام شروع کیے زیادہ عرصہ نہيں ہوا تھا جب انہیں اس قسم کے آلات کی ناکامی کی …مزید پڑ ھیں

پاکستان میں کرونا وائرس: تعلیمی ادارے کھول دیے گئے؛ پاکستان میں ویکسین کے ٹرائلز شروع کرنے کی تیاری

اعداد و شمار: جمعہ کی دوپہر تک، پاکستان میں covid-19 کے مجموعی کیسز کی کل تعداد 300,371 تک پہنچ چکی تھی۔ اب تک 6,370 اموات واقع ہوچکی ہيں، جس میں سے پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران جانبحق ہونے والوں کی تعداد پانچ رہی۔ اب تک 288,206 افراد صحتیاب ہوچکے ہيں۔ پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران …مزید پڑ ھیں

دواساز کمپنی ایسٹرا زينیکا نے ایک شرکت کنندہ کی بیماری کے باعث کرونا وائرس کی ویکسین کے ٹرائلز روک دیے ہيں

ایسٹرا زينیکا (AstraZeneca) کے عالمی covid-19 ویکسین کے ٹرائلز تیسرے مرحلے تک پہنچ چکے تھے۔ تاہم ایک برطانوی شرکت کنندہ کے بیمار ہونے کے بعد انہوں نے اپنے پروگرام کو عارضی طور پر روک دیا ہے۔ اس وقت یقین سے نہيں کہا جاسکتا کہ ان کی بیماری کی وجہ یہ ویکسین تھی یا کچھ اور۔ …مزید پڑ ھیں

بھارت کے کالے قوانین: ایک عالمی وبا کے باوجود انٹرنیٹ بلیک آؤٹس کا سلسلہ جاری

ہر سال کی طرح، اس بار بھی مقبوضہ کشمیر میں موسم بہار اپنی تمام تر رنگینیوں سمیت آیا۔ لیکن اس سال وہاں کے رہائشیوں کو ایک نئی صورتحال کا سامنا تھا۔ 18 مارچ کو مقبوضہ کشمیر کے سب سے بڑے شہر سری نگر میں covid-19 کا پہلا کیس سامنے آیا۔ شہر کے ناظم نے لوگوں …مزید پڑ ھیں

نئے قسم کے کپڑوں سے ایئرکنڈیشننگ کے اخراجات کس طرح بچائے جاسکتے ہيں؟

نام: للی کائی (Lili Cai) عمر: 33 سال ادارہ: یونیورسٹی آف الینوائے جائے پیدائش: چین للی کائی نے نینومواد کی مدد سے ایک عام ٹی شرٹ کی موٹائی رکھنے والا کپڑا ایجاد کیا ہے جو آپ کے جسم کو ٹھنڈا یا گرم رکھ سکتا ہے۔ کائی نے یہ کپڑا بنانے کے لیے اس بات سے …مزید پڑ ھیں

دنیا کی ساری ٹیکنالوجی نے ایک وبا کے سامنے گھٹنےٹیک دیے

ٹیکنالوجی کے دو اہم ترین مقاصد ہیں: انسانوں کو صحتیاب رکھنا اور ان کی جان بچانا۔ لیکن امریکہ بلکہ پوری دنیا میں ٹیکنالوجی ان مقاصد میں بری طرح ناکام ثابت ہوچکی ہے۔ اب تک کئی لاکھ افراد جاں بحق ہوچکے ہیں، عالمی معیشت تباہ و برباد ہوچکی ہے، اور covid-19 کی وبا سے کسی طرح …مزید پڑ ھیں

ڈیٹا ماڈلنگ: اعداد و شمار کے پیچھے کتنا دھوکا چھپا ہے؟

16 مارچ کو لندن کے امپیریل کالج (Imperial College) کی covid-19 ریسپانس ٹیم (Response Team) نے ایک پیپر شائع کیا، جس میں کرونا وائرس کے باعث شرح اموات کے متعلق کئی خوفناک قسم کی پیشگوئیاں شامل تھیں۔ مثال کے طور پر، اس ٹیم کے کیلکولیشنز کے مطابق امریکہ میں 22 لاکھ افراد اس مرض کے …مزید پڑ ھیں

ایک زیادہ بامقصد اور ذہین مستقبل کو ممکن بنانے کے لیے انسانیت کو یکجا کرنا پڑے گا

ماضی میں ہم نے اپنے آپس کے تعلق مزيد گہرے کرنے کے لیے ٹیکنالوجی کا سہارا لینے کی کوشش کی، لیکن ہمیں اس مقصد میں کچھ خاص کامیابی نہيں ہوئی۔ اسی لیے انسانوں پر مرکوز ڈیزائن کی مدد سے معنی خیز تعلقات کے قیام نو میں مستقبل کی کمیونٹیز کا بہت بڑا ہاتھ ہوسکتا ہے۔ …مزید پڑ ھیں

جدیدٹیکنالوجی: چمکتی سکرینوں میں پنہاں اندھیرا

2020ء شروع ہوتے ہی کئی لوگ اپنی زندگیوں کو بہتر بنانے کے حوالے سے کافی پریشانی کا شکار تھے۔ ہم میں سے کئی لوگ ایسے بھی تھے جنہوں نے ’زمانے کے ساتھ چلنے‘ کے چکر میں ہر سال کے طرح بے تکے اور غیرسنجیدہ عزم کرنے کے بجائے اپنی زندگیوں پر غوروفکر کرنے کا ارادہ …مزید پڑ ھیں

دنیا کی ساری ٹیکنالوجی نے ایک وبا کے سامنے گھٹنےٹیک دیے

ٹیکنالوجی کے دو اہم ترین مقاصد ہیں: انسانوں کو صحتیاب رکھنا اور ان کی جان بچانا۔ لیکن امریکہ بلکہ پوری دنیا میں ٹیکنالوجی ان مقاصد میں بری طرح ناکام ثابت ہوچکی ہے۔ اب تک کئی لاکھ افراد جاں بحق ہوچکے ہیں، عالمی معیشت تباہ و برباد ہوچکی ہے، اور covid-19 کی وبا سے کسی طرح …مزید پڑ ھیں

Top