Global Editions

کیا ڈاکٹر آپکی صحت سے متعلق موبائل ڈیٹا سے مطمئن ہونگے؟

صارفین کی صحت سے متعلق معلومات جانچنے والی کئی ڈیوائسز مارکیٹ میں موجود ہیں اور کئی کمپنیاں اس میدان میں کام کر رہی ہیں۔ صارفین کی صحت سے متعلق معلومات درست ہیں یا نہیں اس پر کئی سوالات اٹھتے رہیے ہیں لیکن اصل سوال یہ ہےکہ آپکا ڈاکٹر ان معلومات سے متفق ہے اور کیا اس کےپاس اتنا وقت ہے کہ وہ مہینے بھر کا ڈیٹا اس نشست میں دیکھ سکے، کیونکہ آپکا ڈاکٹر ہی آپکی صحت سے متعلق صحیح رائے دے سکتا ہے۔ وئیرایبل ڈیوائسز بنانے والے کئی ادارے جن میں ایپل، فٹ بٹ اور پیبل شامل ہیں ،جلد مزید 76 ملین ڈیوائسز مارکیٹ میں فروخت کے لئے پیش کرینگے اور ایک حالیہ سروے یہ بتاتا ہے کہ ان کی مانگ میں روز بروز اضافہ ہوتا جا رہا ہے، لیکن سروے کے مطابق ڈاکٹروں کی ایک بہت بڑی تعداد ان وئیر ایبل ڈیوائسز سے متاثر نظر نہیں آتی، کیونکہ اصل سوال اپنی جگہ پر برقرار ہے اور وہ یہ ہےکہ ان کی معلومات کتنی قابل اعتمادہے۔ ایک غیر منفعت بخش طبی ادارے ساج بائیو نیٹ ورک (Sage Bionetwork) سے منسلک ماہر سرطان اینڈریو ٹراسٹر (Andrew Trister) کا کہنا ہے کہ میں نے ایسے مریضوں کو دیکھا ہے جو ان وئیر ایبل ڈوائسز سے حاصل ہونے والے ڈیٹا پر مبنی ایکسل شیٹس لے کر آتے ہیں اور وہ یہ تک نہیں جانتے کہ یہ معلومات درست اور قابل اعتماد ہیں بھی یا نہیں، پھر وہ اس پر مصر ہوتے ہیں کہ ان معلومات کا جائزہ لیا جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ مجھے سمجھ نہیں آتا ایسے مریضوں اور ایسی معلومات کا کیا کروں؟ کیونکہ طبی اعتبار سے ان وئیر ایبل ڈیوائسز سے حاصل ہونے والی معلومات کی بناء پر کوئی رائے قائم نہیں کی جا سکتی۔ سینٹر آف ڈیجیٹل ہیلتھ کے سئنیر تحقیق کار نیل سہگل (Neil Sehgal) کا کہنا ہے کہ ہم نے اس سنٹر میں گزشتہ دو برسوں میں آنے والے مریضوں کی وئیر ایبل ڈیوائسز سے حاصل ہونے والی معلومات کی مروجہ طریقوں سے جانچ کی اور بہت کم ڈیوائسز ایسی تھیں جن کی معلومات کو درست کہا جا سکتا ہے باقی تمام ڈیوائسز کی ریکارڈ شدہ معلومات غلط تھیں، اور بہت سی ڈیوائسز تو باقاعدہ منظور شدہ بھی نہیں ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ عوامی استعمال سے پہلے ان ڈیوائسز کو اس حد تک قابل اعتماد ہونا چاہیے کہ ڈاکٹر ان ڈیوائسز سے حاصل ہونے والی معلومات پر انحصار کر سکیں۔

تحریر: اینڈریو روزینبلم (Andrew Rosenblum)

Read in English

Authors
Top