Global Editions

سمارٹ عینکوں کے کاروباری استعمال میں اضافہ

کاروباری کمپنیاں اور ادارے اپنے کاموں میں معاونت کیلئے سمارٹ گلاس سے بہت فائدہ اٹھا رہے ہیں۔ مثلاً اےپی ایکس (APX) کے برائن بیلارڈ (Brian Ballard)کی کمپنی نے 2010 میں فوجی مقاصد کیلئے استعمال ہونے والے سمارٹ گلاسز کیلئے سوفٹ وئیر بنایا تھا کمپنی کے گاہکوں میں صنعتکار سے لے کر ٹیلی کمیونیکیشن کمپنیز تک کے ملازم ہیں جن کے کارکن کام کے دوران سمارٹ گلاس استعمال کرتے ہیں۔ ایسا معلوم ہوتاہے کہ یہ نتیجہ اخذ کرنا غلط ہے کہ کمپنیاں سمارٹ گلاس استعمال کرنا بند کردیں گی۔ خود برائن بیلارڈ کہتے ہیں کہ عام افراد سمارٹ گلاس کو عیاشی سمجھتے ہیں جبکہ کمپنیاں انہیں اپنے دفتری، فیلڈ کے کاموں میں معاونت اور مسائل کے حل کیلئے استعمال کرتی ہیں۔ بیلارڈ کہتے ہیں کہ کمپنیوں کو بڑی اچھی طرح اندازہ ہو گیا ہے کہ ان گلاسز سے کس طرح بہتر انداز میں کام لینا ہے یہ فیکٹریوں میں سامان کی سیٹنگ، گھر یا دفاتر سے باہر آلات کی تنصیب وغیرہ کا کام میں استعمال ہو سکتے ہیں جس میں کارکن کو دونوں ہاتھ فری رکھنے کی ضرورت ہوتی ہے۔ سمارٹ گلاس طبی مقاصد کیلئے بھی بہت کام آرہے ہیں۔ سان فرانسسکو کی نئی کمپنی آگمیٹکس ) (Augmedix نے ڈاکٹرز کو مریض کے بارے میں تازہ ترین صورتحال اور رپورٹس کے بارے میں آگاہی کیلئے سمارٹ گلاس فراہم کئے ہیں۔ جس سے انہیں مریض کا ریکارڈ چیک کرنے کی فوری سہولت میسر آگئی ہے ورنہ انہیں ایک مریض کا ریکارڈ اور اس کی صحت کے بارے میں معلومات کیلئے دن میں تین چار گھنٹے صرف ہوتے تھے۔ اس کے علاوہ ڈاکٹرز سمارٹ گلاس کے ذریعے مریض کے بارے میں ضرورت پڑنے پر نتائج کا چارٹ طلب کرکے ہدایات بھی دے سکتے ہیں۔ آگمیڈکس کے سی ای او( CEO )کہتے ہیں کہ امریکہ میں ہزاروں کی تعداد میں ڈاکٹرزمعمولی فیس دے کر ہارڈ وئیر، سوفٹ وئیر اور تکنیکی معاونت کیلئے سمارٹ گلاس استعمال کررہے ہیں۔ آگمیڈکس صارفین میں البیوقرقے( Albuquerque )اور نیو میکسیکو میں اے بی کیو( (ABQ کمپنیوں کے 15 ڈاکٹرز سمارٹ گلاس استعمال کررہے ہیں جس سے ڈاکٹرز کی قریباً دن میں تین گھنٹوں کی بچت ہوتی ہے جس میں وہ دیگر مریضوں کو دیکھ سکتے ہیں۔ اس کے باوجود سمارٹ گلاس کی راہ میں بہت سی رکاوٹیں ہیں۔ سمارٹ گلاس کی کمپنیاں اس کے حجم اور معیار کو بہتر بنانے کی کوششیں کررہی ہیں، اس کے علاوہ بیٹریوں کی مدت بڑھانے کی کوشش بھی کی جارہی ہے تاکہ سمارٹ گلاس پر دیگر کاموں کے علاوہ ویڈیو چل سکیں۔

گوگل نے جنوری میں ہی عام افراد کیلئے سمارٹ گلاس کی فروخت بند کرنے کا اعلان کردیا تھا کیونکہ اکثر چہرے پر پہنے ہوئے کمپیوٹر کا مذاق اڑایا جاتاہے جبکہ گوگل کمپنی پرعزم ہے کہ وہ پہننے والے گیجٹس بناتی رہے گی۔ یہ معلوم کرنا آسان ہے کہ کتنے گوگل گلاس اس وقت کام کے دوران استعمال ہورہے ہیں اورکتنے روزانہ عام افراد استعمال کررہے ہیں۔ ہمیں شاید ذاتی معلومات کے تحفظ کا کوئی مسئلہ نہ ہو۔ بلارڈ تاحال یہ نہیں بتا سکتا کہ سمارٹ گلاس کے کتنے ہیڈ سیٹ کمپنی سے خریدے جارہے ہیں۔

تحریر: راشیل میٹز Rachel Metz

Read in English

Authors

*

Top