Global Editions

زیکا وائرس کے علاج کیلئےڈی این اے ویکسئین تیار، انسانوں پر تجربات شروع

دنیا کے کئی ممالک میں موت کی علامت بننے والے زیکا وائرس کے علاج کے لئے ویکسئین کی تیاری کی کوششیں کافی عرصے سے جاری تھیں مگر موثر دوا کی تیاری میں ناکامی کا سامنا تھا تاہم اب اس مرض کے علاج کے لئے ایک ویکسئین تیار کر لی گئی ہے اور اس ویکسئین کے انسانوں پر تجربات کے لئے امریکی حکومت نے اجازت دے دی ہے۔ جس کے بعد اب توقع کی جا رہی ہے کہ موت کی علامت بننے والے اس بخار پر قابو پا لیا جائیگا۔ اس ویکسئین کا میری لینڈ میں نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ میں ایک رضا کار پر تجربہ کیا گیا۔ امریکی حکام زیکا وائرس پر قابو پانے میں دن رات ایک کئے ہوئے ہیں کیونکہ حالیہ دنوں میں صرف میامی میں زیکا وائرس سے 14 افراد کے متاثر ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ یہ ویکسئین اس وبائی مرض کو امریکی سرحدوں سے باہر دھکیل دے گی تاہم یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ حتمی ویکسئین کے تیاری میں کتنا وقت لگے گا اور یہ ویکسئین کس حد تک محفوظ ہے ۔ اس ویکسئین کی تیاری کے لئے ڈی این اے کی مدد لی گئی ہے اور اسے DNA vaccine کہا جاتا ہے اس کے تحت وائرس کی جین کو ایک تیز پریشر کے ساتھ انسانی بازو میں انجیکٹ کیا جاتا ہے تاکہ وائرس کا ڈی این اے انسانی ڈی این اے کے پروٹینز کے ساتھ مل کر اس زیکا کے اثرات کا خاتمہ کر سکے۔ اس طرح یہ پہلی ڈی این اے ویکسئین ہو گی جو مارکیٹ میں تجارتی بنیادوں پر دستیاب ہو گی۔ National Institute for Allergy and Infectious Disease کے ڈائریکٹر انتھونی فوشی (Anthony Fouci) کے ترجمان نے اس تجربے کے حوالے سے کچھ بھی کہنے سے انکار کیا تاہم یہ امید ہے کہ اس حوالے سے کسی قسم کا اعلان جلد متوقع ہے ۔ دوسری جانب اس تجربے سے منسلک ایک شخصیت کا کہنا تھا کہ رضاکار پر ویکسئین کا تجربہ کر لیا گیا ہے۔ ویکسئین کے انسانی تجربات کے حوالے سے یہ ضرور ہے کہ یہ ویکسئین اٹھارہ سے پینتیس برس کے 120 افراد پر آزمائی جائیگی۔ اس ویکسئین کے تجربات تین مختلف مقامات میامی، اٹلانٹا اور بالٹی مور میں ہونگے۔ اس وقت براعظم امریکہ میں زیکا وائرس کے ایک ہزار سے زائد کیس رپورٹ ہو چکے ہیں تاہم یہ سب حال ہی میں بیرون ملک سفر کر کے امریکہ واپس آئے تھے، البتہ حکام نے سرکاری طور پر صرف میامی میں زیکا وائرس کے چار کیس رپورٹ ہونے کی تصدیق کی ہے اور یہ چاروں افراد امریکہ میں رہتے ہوئے اس وائرس کا شکار ہوئے ہیں۔ اس کا مطلب یہ ہوا کہ اب میامی میں زیکا وائرس کے حامل مچھر پائے جانے کا امکان ہے۔ اس اطلاع کے بعد امریکہ بھر میں حفاظتی انتظامات سخت کر دئیے گئے ہیں فلوریڈا میں مچھروں کے خاتمے کے لئے سپرے مہم کا آغاز ہو گیا ہے اور لوگوں کو بھی مچھروں سے بچائو کی تلقین کی جا رہی ہے۔

تحریر: انٹونیو ریگالڈو (Antonio Regalado)

Read in English

Authors

*

Top