Global Editions

ایسا گلاب جو کبھی نہیں مرجھائے گا

گھروں کی سجاوٹ کے لئے عموماً مصنوعی پھول رکھے جاتے ہیں کیونکہ اصلی پھول جلدی مرجھا جاتے ہیں اور مرجھائے پھول اچھے نہیں لگتے۔ لیکن اب اس حوالے سے پریشانی کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ اب جنیٹنک انجینئرنگ کی تکنیک کی وجہ سے ایسے گلاب پیدا کئے جا سکتے ہیں جو طویل عرصے تک تروتازہ رہیں گے۔ اسی تناظر میں ایک کمپنی مونسناٹو (Monsanto) ایسی ٹیکنالوجی کی تیاری کی کوششوں میں مصروف ہے جو پھولوں کے سردار گلاب کی عمر میں اضافہ کریگی یعنی اب اس ٹیکنالوجی کے تحت اگائے جانیوالے گلاب کبھی نہیں مرجھائیں گے۔ سینٹ لوئیس کی بائیو ٹیک کمپنی مونسناٹو نے حال ہی میں اعلان کیا ہے کہ وہ سرخ، گلابی اور بنفشی گلاب کے ایسے پھول اگانے کے لئے ٹیکنالوجی جنیٹنک انجینئرنگ کی مدد سے تیار کرنے کی کوشش کر رہی ہے جس کی مدد سے ان پھولوں کی طبی عمر میں خاطر خواہ اضافہ کیا جا سکے گا۔ اس ٹیکنالوجی کے تیار ہونے سے پھولوں کی صنعت سے وابستہ افراد کو بہت فائدہ حاصل ہوگا۔ اسکی مدد سے انہیں پھولوں کو پھولوں کی منڈیوں اور دیگر مقامات تک لے جانے میں آسانی ہو گی اور وقت کے ضیاع کے سبب پھولوں کے مرجھا جانے کے خوف سے آزاد ہو سکیں گے اور اس کے ساتھ ساتھ یہ پھول طویل عرصے تک تروتازہ بھی رہیں گے، اس وقت پھولوں کو کئی ممالک تک پہنچانے کے ہوائی جہازوں کا سہارا لیا جاتا ہے اور پھولوں کو مرجھانے سے بچانے کے لئے ان پر ادویات کا سپرےبھی کرنا پڑتا ہے تاہم اس ٹیکنالوجی کی کامیابی سے اس صنعت کے لئے ایسے اخراجات میں بھی کمی آئیگی۔ اس وقت پھولوں کی برآمد ایک بڑی صنعت ہے صرف 2013ء میں 20 ارب ڈالرز کے پھول، کلیاں اور پتیاں برآمد کی گئیں، پھولوں کے بڑے برآمد کنندگان میں ہالینڈ، ایکواڈور اور کولمبیا شامل ہیں۔ یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ برآمد کئے جانیوالے پھولوں کا 80 فیصد صرف امریکہ میں فروخت ہوتا ہے۔ اس ٹیکنالوجی کی تیاری کے لئے مونسناٹو کے سائنس دان پھولوں کے مرجھانے کی خاصیت رکھنے والے جین میں ان کے جنیٹک مالیکیول جنہیں RNA کہا جاتا ہے تبدیل کر دینگے۔ اس معاملے پر تحقیق کرنے والے سائنسدانوں جل ڈیکمین (Jill Deikman) اور نکولس ویگنر (Nicholas Wagner) نے شاخوں سے اتارے گئے پھولوں پر پودوں کی جڑوں سے حاصل کئے جانیوالے آر این اے کی مدد سے ایتھالائن (Ethylene) تیار کرنے کی کوشش کر رہے ہیں یہ بے بو گیس پھولوں کو مرجھانے سے محفوظ رکھتی ہے۔ اگر مونسناٹو اپنے تجربات میں کامیاب ہو جاتی ہے تو یہ اس میدان میں ایک اہم پیشرفت ہو گی۔ اس حوالے سے کمپنی کے ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ اہم پیشرفت ہے۔

تحریر: انٹونیو ریگالڈو (Antonio Regalado)

Read in English

Authors

*

Top