Global Editions

اور اب سمارٹ واچ۔۔۔۔۔۔

اب خوش لباسی، ذہانت، خوش اخلاقی وغیرہ وغیرہ جیسے الفاظ کسی شخصیت کو سمارٹ کہنے کے لئےاستعمال نہیں ہوتے بلکہ ٹیکنالوجی میں جدت آنے کے بعد سمارٹ کا لفظ بھی معلوم ہوتا ہے صرف ایسی ہی اصطلاحات کے لئے موسوم کر دیا گیا ہے، جیسے سمارٹ فونز، سمارٹ ایپلی کیشنز اور اب سمارٹ گھڑی۔ سمارٹ واچ کا آئیڈیا برا نہیں لیکن مارکیٹ میں آنیوالی سمارٹ گھڑیاں نہ صرف بھاری ہوتی ہیں بلکہ دیدہ زیب بھی نہیں ہوتیں۔ پیبل کمپنی کی جانب سے لانچ کی گئی نئی سمارٹ گھڑی نہ صرف استعمال میں آسان ہے بلکہ یہ دیدہ زیب بھی ہے اور وزن میں بھی ہلکی ہے۔ یہ دیکھنے میں روائیتی گھڑی جیسی ہی ہے لیکن اس میں ای میلز، میسیجنگ، انٹرنیٹ، الرٹس اور ان کمنگ کالز سننے اور وائس میسجنگ سے جواب دینے کی سہولت بھی موجود ہے۔ ٹچ سکرین کی خصوصیت کی حامل گھڑی کے ڈائل پر مختلف بٹن موجود ہیں جن کی مدد سے آپ نہ صرف اپنی شیڈول ملاقاتیں دیکھ سکتے ہیں، موسم کا حال جان سکتے ہیں بلکہ جب چاہیں ان تمام سہولیات کو معطل بھی کر سکتے ہیں۔ فون پر آنیوالے پیغامات اور کالز گھڑی پر بھی نمودار ہوتے ہیں اور اگر آپ مصروفیت کے سبب جواب نہ دے سکیں تو گھڑی پہلے سے ریکارڈ شدہ وائس میسج کے ذریعے جواب دینے کی صلاحیت رکھتی ہے۔ یہ سہولت ابھی صرف اینڈریوائیڈ سمارٹ فون رکھنے والے صارفین ہی استعمال کر سکتے ہیں جبکہ ایپل آئی فون کے لئے یہ سہولت جلد متعارف کروا دی جائے گی۔ اس گھڑی کے استعمال میں جو اہم قباحت سامنے آئی ہے وہ اس کی بیٹری کی مدت، اس گھڑی کی بیٹری کو وقتاْ فوقتاً چارج کرنا پڑتا ہے

 

تحریر: ریشیل میٹز Rachel Metz

Read in English

Authors

*

Top