Global Editions

اب نابینا افراد بھی ٹیبلٹ استعمال کر سکیں گے

نابینا افراد کے لئے کم قیمت بریل ٹیبلٹ کی تیاری کے لئے کام کا آغاز ہو گیاہے۔ جس سے اب نابینا افراد اس ٹیبلٹ کے ذریعے ریاضی، سائنس، انٹرنیٹ اور دیگر امور سرانجام دینے کے قابل ہو سکیں گے۔ اس ضمن میں تحقیق کاروں نے ٹیبلٹ کا پروٹو ٹائپ تیار کر لیا ہے اور امید ظاہر کی جا رہی کہ حتمی پراڈکٹ ایک ڈیڑھ برس میں تیار کر کے ٹیکنالوجی کو مارکیٹ میں پیش کر دیا جائیگا۔ یہ ڈیوائس جسے یونیورسٹی آف مشی گن میں تیار کیا جا رہا ہے میں بریل (نابینا افراد کے لئے مخصوص رسم الخط) کے ابھاروں کے لئے ہوا یا مخصوص سیال استعمال کیا جائیگا۔ جنہیں دبانے سے پاپ اپ بلاکس یا ڈاٹس (Dots) تشکیل دینگے جو بریل کے ابھاروں کی مانند ہونگے۔ اس ٹیبلٹ کو بنانے کے لئے سلیکون صنعت کی تکنیک استعمال کی جا رہی ہے جہاں چپ (Chip) کو کئی پرتوں میں نصب لگایا جاتا ہے چہ جائیکہ کہ چھوٹے چھوٹے پرزے تیار کئے جائیں۔ نیشنل فائونڈیشن فار بلائنڈز کے ترجمان کرس ڈینییل سن (Chirs Daniealsen) کا کہنا ہے کہ بڑے ڈسپلے کے ساتھ اس ٹیبلٹ کی تیاری ایک ڈرامائی اقدام ہے اور خاص طور پر قیمت کے اعتبار سے بھی یہ مناسب پراڈکٹ ہے۔ اس ڈیوائس کی قیمت ایک ہزار ڈالرز رکھی گئی ہے۔ تحقیق کاروں کا ماننا ہے کہ جیسے ہی یہ ٹیبلٹ تیار ہو کر مارکیٹ میں آئیگا اور نابینا افراد اس کا استعمال شروع کر دینگے تو ٹیکنالوجی کے نرخ کم ہو جائینگے۔ یہ ٹیبلٹ اس حوالے سے بھی اہم ہے کیونکہ نابینا افراد میں اب بریل سیکھنے کے رحجان میں کمی آ رہی ہے۔ نیشنل فائونڈیشن آف بلائنڈ کی رپورٹ کے مطابق اس وقت صرف دس فیصد نابینا بچے بریل سیکھ رہے ہیں جبکہ 1960ء کی دہائی میں شرح 60 فیصد تھی۔ تاہم اس کا مطلب یہ نہیں کہ اب ہمیں دو سو سال پرانے رسم الخط اور پڑھنے کے طریقے کو بدل دینا چاہیے لیکن ضرورت اس امر کی ہے کہ نابینا افراد کو بھی نئی ٹیکنالوجی خاص طور پر کمپیوٹر اور ٹیبلٹس وغیرہ میں شامل کرنا چاہیے تاکہ وہ بھی نئے رحجانات سے ہم آہنگ ہو سکیں۔ یونیورسٹی آف مشی گن میں بریل ٹیبلٹ تیار کرنے والے تحقیق کاروں کی ٹیم کے سربراہ سیلے او مودہراں (Sile O'Modhrain) کا کہنا ہے کہ اس ٹیبلٹ میں نابینا افراد ریاضی سیکھنا چاہیں یا میوزک سننے کے خواہشمند ہوں انہٗیں ہر کمانڈ بریل ہی میں دینا ہو گی۔ سیلے او مودہراں کا ماننا ہے کہ ان کی ٹیم ایک ڈیڑھ برس کے اندر اس ٹیبلٹ کو تیار کر لے گی۔

تحریر: سگنے بریویسٹر (Signe Brewster)

Read in English

Authors
Top